ریلوے آلات کی تنصیب میں بدعنوانی کی جانچ پڑتال کا فیصلہ، خواجہ سعد رفیق بھی شکنجے میں

نیب نے وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق کے خلاف ریلوے آلات کی تنصیب میں بدعنوانی کی جانچ پڑتال کا فیصلہ کرلیا۔ قومی احتساب بیورو کے اعلامیے کے مطابق چیئرمین جسٹس ریٹائرڈ جاوید اقبال کی زیرصدارت نیب ہیڈکوارٹرز میں اجلاس ہوا، جس میں وزیر ریلوے سعدرفیق، ممبر قومی اسمبلی نواب وسان اور وزیر قانون خیبرپختونخوا امتیاز شاہد قریشی کے خلاف تحقیقات کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ نیب کے اعلامیے میں بتایا گیا ہےکہ خواجہ سعد رفیق کے خلاف ریلوےآلات کی تنصیب میں بدعنوانی کی جانچ پڑتال کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ اعلامیے کے مطابق ریلوے سکھر ڈویژن کے افسران کے خلاف بھی آلات کی خریداری میں خردبردکی جانچ پڑتال ہوگی، جب کہ ٹنڈوآدم تا روہڑی کمپیوٹر بیسڈانٹرلاکنگ سسٹم لگانے میں بدعنوانی کی شکایت پر بھی تحقیقات کی جائیں گے۔ اس کے علاوہ چیئرمین نیب نے پیپلزپارٹی سے تعلق رکھنے والے ممبر قومی اسمبلی نواب وسان کے خلاف آمدن سے زائد اثاثے بنانے کے الزام اور خیبرپختونخوا کے وزیر قانون امتیاز شاہد قریشی کے خلاف 111 افراد کی غیر قانونی تقرری کی جانچ پڑتال کا حکم دیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں

وزیراعظم21 فروری کوجنوبی پنجاب سے احساس”اثاثہ جات اسکیم” کاآغازکریں گے

وزیراعظم21 فروری کوجنوبی پنجاب سے احساس”اثاثہ جات اسکیم” کاآغازکریں گے

اسلام آباد: وزیراعظم21 فروری کوجنوبی پنجاب سے احساس”اثاثہ جات اسکیم” کاآغازکریں گے ، اسکیم سے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے