افطارکے فوری بعد سگریٹ نوشی

ترکی میں گیرسن یونی ورسٹی کے میڈیکل کالج میں شعبہ امراض قلب کے سربراہ ڈاکٹر قاغان قولان کا کہنا ہے کہ رمضان المبارک میں افطار کے فوری بعد سگریٹ نوشی کرنے سے امراض قلب کے خطرات میں اضافہ ہوجاتا ہے۔

ڈاکٹر قولان کے مطابق رمضان المبارک کے دوران افطار کے فوری بعد سگریٹ پینے والے افراد میں جسمانی جھٹکوں، ہاتھ اور پاؤں میں کپکپاہٹ بڑھنے کا خدشہ بڑھ جاتا ہے کیوں کہ طویل وقفے کے بعد سگریٹ پینے سے جسم کا تمام مدافعتی نظام درہم برہم ہوجاتا ہے جب کہ ایسے افراد کے امراض قلب میں مبتلا ہونے کے خطرات میں بھی اضافہ ہوجاتا ہے تاہم افطار کے تھوڑے وقفے سے سگریٹ پینے پرایسا نہیں ہوتا۔

ڈاکٹرقولان کا کہنا ہے کہ رمضان میں سگریٹ نوشی سے خون کی شریانوں کی دیواروں کو شدید نقصان پہنچتا ہے جو باقی سال بھر پہنچنے والے نقصان سے کہیں زیادہ ہوتا ہے جب کہ طبی تحقیقات سے معلوم ہوتا ہے کہ رمضان میں دل کے امراض کے سبب اموات میں اضافہ ہوجاتا ہے اوراسی سلسلے میں سگریٹ نوشی بھی اچانک موت کا سبب بن سکتی ہے۔ انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ رمضان المبارک کے مہینے سے فائدہ اٹھا کر سگریٹ نوشی ترک کی جاسکتی ہے، اگر جسم کو 12 سے 16 گھنٹے تک تمباکو نوشی سے دور رکھا جاسکتا ہے تو یہ عمل سال بھر بھی ہوسکتا ہے اس لئے رمضان المبارک کے دوران اگر تمباکو نوشی سے اجتناب کیا جائے تو اس سے مکمل جھٹکارا حاصل کیا جاسکتا ہے۔

یہ بھی پڑھیں

فلسطین کو لاحق خطرات

صدی کی ڈیل ! فلسطین کو لاحق خطرات تحریر: صابر ابو مریم صدی کی ڈیل …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے