لاہورمیں پسند کی شادی کرنے پرماں نے بیٹی کوزندہ جلادیا

لاہور: فیکٹری ایریا میں پسند کی شادی کرنے پر ماں نے اپنی بیٹی کو زندہ جلا دیا۔

 لاہورکےعلاقے فیکٹری ایریا کی رہائشی 17 سالہ زینت نے ایک ہفتے قبل گھرسے بھاگ کر حسن نامی نوجوان سے پسند کی شادی کی تھی تاہم اس کی ماں بیٹی کو گھرسے شادی کی رسومات ادا کرنے اور رخصتی کی یقین دہانی کراکے واپس لائی تھی۔ گزشتہ رات اچانک چیخ و پکارکی آوازیں آنے لگیں، جس پرپولیس جب اس کے گھر پہنچی تووہاں انہیں زینت کی جھلسی ہوئی لاش ملی جب کہ اس کی ماں اوربہنیں بھی گھرمیں موجود تھیں۔

پولیس کا کہنا ہے کہ زینت کی لاش کوپوسٹ مارٹم کے لیے اسپتال پہنچادیا گیا ہے جب کہ اس کی ماں نے زینت کو آگ لگا کرمارنے کا اعتراف کرلیا ہے، جس پراسے گرفتارکرلیا گیا ہے۔ زینت کی ماں کا کہنا تھا کہ اس کی بیٹی قانونی طور پرنابالغ تھی، حسن نے اسے ورغلا کرشادی کی۔ وقوعہ کے وقت وہ شدید غصے میں تھی اور اس نے اپنی بیٹی کو زندہ جلادیا۔

یہ بھی پڑھیں

قصور سے اغواء تین بچوں کی لاشیں مل گئیں

قصور سے اغواء تین بچوں کی لاشیں مل گئیں

قصور کے علاقے چونیاں میں ڈھائی ماہ کے دوران اغواء ہونے والے تین بچوں کی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے