لاہور کے ایچی سن اسپتال میں ڈاکٹرز کی مبینہ غفلت سے زچہ و بچہ جاں بحق

لاہور: لیڈی ایچی سن اسپتال میں ڈاکٹرز کی مبینہ غفلت سے دوران زچگی خاتون اور بچہ دونوں ہی جاں بحق ہوگئے۔

 لاہور کے لیڈی ایچی سن اسپتال میں ڈاکٹرز کی مبینہ غفلت کے باعث زچگی کے دوران 18 سالہ سنبل اور اس کا بچہ جاں بحق ہوگیا۔ سنبل اور بچے کی ہلاکت پر لواحقین کی جانب سے شدید احتجاج جاری ہے، اور احتجاج کی وجہ سے کسی بھی نقصان سے بچنے کے لیے اسپتال انتظامیہ نے تمام داخلی و خارجی دروازوں پر تالے لگا دیئے ہیں جس کے باعث دیگر مریضوں کی مشکلات میں مزید اضافہ ہوگیا ہے۔ ورثاء کے احتجاج کے باعث اسپتال انتظامیہ نے پولیس کی بھاری نفری کو بھی طلب کرلیا۔

دوسری جانب وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف نے لیڈی ایچی سن ہسپتال میں خاتون اور نومولود بچے کے جاں بحق ہونے کے واقعہ کا نوٹس لیتے ہوئے سیکرٹری صحت سے رپورٹ طلب کرلی ہے۔ وزیراعلیٰ شہباز شریف نے حکم دیا ہے کہ واقعہ کی تحقیقات کو جلد از جلد مکمل کرکے غفلت کے ذمے داروں کے خلاف سخت کارروائی کی جائے۔

یہ بھی پڑھیں

پرائس کنٹرول مجسٹریٹس دفاتر میں بیٹھنے کی بجائے فیلڈ میں جا کرقیمتیں چیک کریں

پرائس کنٹرول مجسٹریٹس دفاتر میں بیٹھنے کی بجائے فیلڈ میں جا کرقیمتیں چیک کریں

لاہور: وزیراعلیٰ پنجاب نے مہنگائی پرقابو پانے کے لیے عملی اقدامات کی ہدایت کرتے ہوئے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے