جب یہ کام شروع ہوگیا تو میں نے فحش فلموں میں کام کرنا چھوڑ دیا، فحش اداکارہ نے شرمناک کام کو چھوڑنے کی انتہائی حیران کن وجہ بتادی

نیویارک: فحش فلموں کی معروف لبنانی نژاد امریکی اداکارہ میا خلیفہ کچھ عرصہ پہلے اس شرمناک کام سے کنارہ کشی اختیار کر چکی ہے۔ اب اس نے یہ کام چھوڑنے کی حیران کن وجہ بھی بتا دی ہے۔ میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق میا خلیفہ نے بتایا ہے کہ ”میں نے فحش فلم انڈسٹری چھوڑنے کا فیصلہ اس وقت کیا جب مجھے شدت پسند تنظیم داعش کی طرف سے قتل کیے جانے کی دھمکیاں ملنے لگیں۔

پچیس سالہ میاخلیفہ 10سال کی عمر میں ماں باپ کے ساتھ لبنان کے دارالحکومت بیروت سے امریکہ منتقل ہوئی تھی۔یہ بات بھی بہت کم لوگ جانتے ہیں کہ میاخلیفہ لبنان کی مسیحی فیملی سے تعلق رکھتی ہے۔ اس نے تاریخ میں گریجوایشن کی اور پھر فحش فلم انڈسٹری میں کام کرنے لگی۔ اسے چھوڑنے کے بعد اب وہ ایک سپورٹس شو کی میزبانی کر رہی ہے۔ اس نے ڈیلی سٹار سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ”داعش کی دھمکیوں کی وجہ سے میری زندگی تباہ ہو کر رہ گئی تھی جس کی وجہ سے مجھے یہ فیصلہ کرنا پڑا۔

یہ بھی پڑھیں

عائزہ واحد خاتون ہے جس کے ساتھ میں نے فلرٹ نہیں کیا، دانش تیمور

کراچی:  دانش تیمور نے اپنی اور عائزہ کی محبت کی کہانی بتاتے ہوئے کہا ہے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے