بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنر کی دفتر خارجہ میں 10 روز میں تیسری بار طلبی، ایل او سی پر فائرنگ کا سلسلہ برقرار

اسلام آباد: پاکستان نے ایل او سی پر بھارتی فوج کی اشتعال انگیزی کے خلاف بھارتی ڈپٹی ہائی کمشنر کو دفتر خارجہ طلب کرکے شدید احتجاج کیا ہے، یہ دس روز میں تیسری بار طلبی تھی، لیکن بھارت پر جنگی جنون اترنے کا نام ہی نہیں لےرہا۔ ترجمان دفترخارجہ کے مطابق بھارت کے ڈپٹی ہائی کمشنر جے پی سنگھ کو دفتر خارجہ طلب کیا گیا اوریکم مارچ کو ایل او سی کے بھمبر سماہنی سیکٹر پر بھارتی فورسز کی جانب سے جنگ بندی معاہدے کی خلاف ورزیوں پر شدید احتجاج کیا گیا۔

ترجمان دفتر خارجہ کی جانب سے کہا گیا کہ بھارتی بلا اشتعال فائرنگ سے نہالہ گاؤں کا شہری ظفراقبال شہید، اہلیہ اوربچہ زخمی ہوئے جب کہ رواں سال بھارتی فائرنگ سے 20 شہری شہید اور71 زخمی ہو چکے ہیں۔ بھارت کی جانب سے سیز فائر کی خلاف ورزیاں خطے کی سلامتی کیلئے خطرہ ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

جب تک سیاستدان جمہوریت نہیں لاتے جمہوریت کیسےآسکتی ہے

جب تک سیاستدان جمہوریت نہیں لاتے جمہوریت کیسےآسکتی ہے

اسلام آباد: وفاقی وزیربرائے سائنس و ٹیکنالوجی فواد چوہدری کا کہنا ہے کہ پاکستان میں …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے