یہ چیز دیکھی تو توبہ کرنے کا فیصلہ کرلیا، فحش فلمیں چھوڑ کر مذہب کا راستہ اختیار کرنے والی اداکارہ نے تبدیلی کی انتہائی حیران کن وجہ بتادی

لندن: ایک وقت تھا کہ برٹنی ڈیلا مورا، جن کا اصل نام جینا پریسلی ہے، کا شمار فحش فلموں کی سرفہرست اداکاراﺅں میں ہوتا تھا لیکن آپ یہ جان کر حیران ہوں گے کہ اب وہ نا صرف فحاشی کے دھندے کو خیرباد کہہ چکی ہیں بلکہ انہوں نے اپنی زندگی مذہب کے لئے وقف کر دی ہے۔ برٹنی کا کہنا ہے کہ انہوں نے بہت چمک دمک دیکھی لیکن جب نشے کی لت اور جنسی بیماریوں نے انہیں موت کے دہانے پر پہنچا دیا تو فحش فلموں کی دنیا سے انہیں ہمیشہ کے لئے نفرت ہوگئی۔ وہ ایک عرصے تک اپنی زندگی کے بارے میں سوچ بچار کرتی رہیں اور پھر ایک دن فیصلہ کیا کہ آئندہ کبھی وہ فحش فلموں میں کام نہیں کریں گی۔

اپنے اس فیصلے کے متعلق بات کرتے ہوئے برٹنی نے بتایا ”یہ خدا کی محبت تھی جس نے میرا دل جیت لیا اور اس کی شفقت نے توبہ کی جانب میری رہنمائی کی۔ میں نے چکاچوند سے بھرپور اپنی زندگی ترک کردی اور محسوس کیا کہ پہلے میرے دل میں جو بے سکونی تھی اب وہ اطمینان میں بدل گئی تھی۔ میں جتنا زیادہ اپنی توجہ کو خدا کی جانب رکھتی تھی میرے دل سے دنیا کی محبت اتنی ہی ختم ہوتی جارہی تھی۔ اب میرا دل سگریٹ نوشی، شراب نوشی، ناچ گانے اور بیہودہ لباس کی جانب مائل نہیں ہوتا۔ اگر میری زندگی میں یہ تبدیلی نہ آتی تو یقیناً میں خود کو برباد کرلیتی۔“

یہ بھی پڑھیں

محکمہ جنگلی حیات کی رابی پیر زادہ کیخلاف کارروائی

لاہور: گلوکارہ رابی پیرزادہ کو گھر میں اژدھے، مگرمچھ اور سانپ رکھنا مہنگا پڑ گیا۔ …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے