بھارت کے جارحانہ اقدامات خطے کے امن میں رکاوٹ ہیں،وزیراعظم

اسلام آباد: وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ پاکستان جاپان سے تعلقات کو انتہائی اہمیت دیتا ہے اور تمام شعبوں میں تعاون کو فروغ دینے کا خواہاں ہے۔ پاکستان کے دورے پر آئے جاپانی وزیرخارجہ کونو نے وزیراعظم شاہد خاقان عباسی سے ملاقات کی جس میں دوطرفہ تعلقات، خطے کی صورتحال اور باہمی دلچسپی سمیت مختلف امور پر تبادلہ خیال کیا گیا۔اس موقع پر وزیراعظم نے جاپانی حکومت کے ساتھ دوستانہ تعلقات ،سرمایہ کاری اور انسانی ترقیاتی وسائل کے شعبوں میں تعاون مزید مستحکم کرنے پر زور دیا۔وزیراعظم نے کہا کہ جاپانی سرمایہ کاروں کو خوش آمدید کہیں گے ،ملک میں غیر ملکی سرمایہ کاروں کے لیے وسیع تر مواقع موجود ہیں۔ وزیراعظم نے کہا کہ بھارت کے جارحیت پرمبنی اقدامات اور اشتعال انگیزیوں سے جنوبی ایشیا میں امن و امان کی صورتحال کو بہتر بنانے میں رکاوٹ ہیں جب کہ مقبوضہ کشمیر میں معصوم شہریوں پر قابض فوج کے مظالم اور بربربیت انسانی حقوق کی سنگیں پامالیاں کررہی ہے۔ ملاقات میں جاپانی وزیرخارجہ کا کہنا تھا کہ ان کا ملک دہشت گردی کے خلاف جنگ میں پاکستانیوں کی قربانیوں اور کارروائیوں کو قدر کی نگاہ سے دیکھتا ہے ۔ان کا مزید کہنا تھا کہ جاپان اپنے دوست ملک کے ساتھ تعلقات کو مزید مستحکم بنانےکے لیے کوششیں جاری رکھے گا۔

یہ بھی پڑھیں

پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس 30 اگست کو طلب

پارلیمنٹ کا مشترکہ اجلاس 30 اگست کو طلب

اسلام آباد: صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے پارلیمنٹ کے دونوں ایوانوں کا مشترکہ اجلاس …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے