قطری شہزادوں کوشکارکی اجازت دینے پرپنجاب حکومت سے جواب طلب

اسلام آباد: ہائی کورٹ نے قطری شہزادوں کو پرندوں کے شکارکی اجازت دینے کے خلاف دائر درخواست پر وفاق اور پنجاب حکومت سے جواب طلب کرلیا ہے۔ قطر اور متحدہ عرب امارات کے شہزادوں کو پرندوں کے شکار کی اجازت دینے کے خلاف درخواست کی سماعت اسلام آباد ہائی کورٹ میں ہوئی۔ درخواست میں وفاق، سیکرٹری خارجہ اور وزیراعلیٰ پنجاب کو فریق بنایا گیا ہے۔ درخواست گزار کا سماعت کے دوران موقف تھا کہ پنجاب حکومت نے قطراور یو اے ای کے شہزادوں کو پرندوں کے شکار کی اجازت دی، شکار کے لیے امیر قطر شیخ حماد کو ضلع بہاولنگر جب کہ شیخ حماد بن جاسم کو بھکر، جھنگ اور لیہ کا علاقہ الاٹ کیا گیا، یہ وہی شہزادے ہیں جن کا پاناما کیس میں مسلسل ذکر ہوا ہے لیکن وہ پیش نہیں ہوئے، محکمہ داخلہ پنجاب نے پرندوں اور جانوروں کی حفاظت ایکٹ 1912 کی خلاف ورزی کی۔ درخواست گزارکی جانب سے اپیل کی گئی کہ عدالت ان دو ملکوں سے ہونے والے معاہدوں کی تفصیلات اورشہزادوں کی سیکیورٹی کے لیے اخراجات کی تفصیل طلب کرے، اس کے علاوہ عدالت عالیہ محکمہ داخلہ پنجاب کی جانب سے جاری نوٹی فکیشن کو غیر آئینی قرار دے۔ عدالت عالیہ نے فریقین سے 10 روز میں جواب طلب کرلیا۔

یہ بھی پڑھیں

سرحدوں پر خطرات ہیں، غیر اعلانیہ جنگ شروع ہو چکی: شیخ رشید

سرحدوں پر خطرات ہیں، غیر اعلانیہ جنگ شروع ہو چکی: شیخ رشید

وزیر ریلوے شیخ رشید احمد نے شہباز شریف کو اپنا اچھا دوست قرار دیتے ہوئے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے