یونیورسٹی آف سوات انتظامیہ نے لڑکے لڑکیوں کے ساتھ چلنے اور بیٹھنے پر پابندی عائد کر دی

سوات: یونیورسٹی آف سوات انتظامیہ نے لڑکے اور لڑکیوں کے اکٹھے بیٹھنے اور ساتھ چلنے پر پابندی عائد کر دی ۔

 انتظامیہ کی جانب سے ہدایت نامہ جاری کیا گیا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ لڑکے اور لڑکیاں یونیورسٹی کے اندر یا باہر ایک ساتھ بیٹھنے اور گھومنے پھرنے سے اجتناب کریں تاہم خلاف ورزی کرنے پرلڑکے یا لڑکی پر پچاس روپے سے 5 ہزار جرمانہ بھی عائد کیا جائے گا۔ انتظامیہ کی جانب سے کہا گیا ہے کہ یہ فیصلہ یونیورسٹی میں پیش آنے والے ناخوشگوار واقعات اور تعلیمی سرگرمیاں متاثر ہونے کی شکایات کے بعد کیا گیا ہے ۔

یہ بھی پڑھیں

صوبائی اسمبلی کے انتخابات کے لیے سیکورٹی پلان مرتب

صوبائی اسمبلی کے انتخابات کے لیے سیکورٹی پلان مرتب

پشاور: پولیس کی جانب سے جاری ہونے والے بیان کے مطابق 20 جولائی کو ضلع …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے