ایک اور بالی ووڈ اداکارہ کو جنسی استحصال کا سامنا

ممبئی: بالی ووڈ میں ایک اور اداکارہ سوارا بھاسکر کو فلم ساز کی جانب سے جنسی ہراساں کرنے کا کیس سامنے آیا ہے۔ حال ہی میں ہالی ووڈ فلمساز ہاروے وینسٹین کی جانب سے اداکاراؤں کو ہراساں کرنے کا کیس سامنے آیا تھا جس پر سوشل میڈیا پر ’می ٹو‘ نامی مہم کا آغاز ہوا جو کچھ ہی دنوں میں پوری دنیا کی آواز بن گیا اور اب تک لاکھوں خواتین اس ٹرینڈ کا استعمال کرچکی ہیں۔ بالی ووڈ میں کچھ اداکاراؤں نے ’می ٹو‘ مہم کا استعمال کیا البتہ متعدد اداکاراؤں نے اس مسئلے پر خاموش رہنا ہی پسند کیا۔

بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق سلمان خان کے ساتھ فلم  ’’پریم رتن دھن پایو‘‘ میں اہم کردار کرنے والی اداکارہ سوارا بھاسکر نے انکشاف کیا کہ انہیں بھی ایک بار جنسی ہراساں کرنے کی کوشش کی گئی۔ انٹرویو کے دوران اداکارہ سے پوچھا گیا کہ کیا آپ کو بالی ووڈ میں کسی کی جانب سے جنسی ہراساں کیا گیا جس پر انہوں نے کہا کہ ایک فلمساز نے مجھے جنسی ہراساں کرنے کی کوشش کی اور ساتھ ہی فلم کی آفر بھی کی لیکن میں نے ایسے بہت سارے کرداروں کو کھودیا کیوں کہ میں ان کے معیار پر پورا نہیں اتر رہی تھی اور اس بات نے مجھے ذہنی طور پر بہت پریشان کیا۔ واضح رہے سوارا بھاسکر آج کل فلم ’ویرے دی ویڈنگ‘ کی شوٹنگ میں مصروف ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

مقبول فوک بلوچی گانے ’لیلیٰ او لیلیٰ‘ کو جدید انداز میں پیش

مقبول فوک بلوچی گانے ’لیلیٰ او لیلیٰ‘ کو جدید انداز میں پیش

عروج فاطمہ کا تعلق بلوچستان کے دارالحکومت کوئٹہ سے ہے اور انہوں نے گزشتہ برس …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے