یمن پہ حملے جاری رکھیں گے، سعودی عرب کا اعلان

ریاض:  سعودی ولیعہد محمد بن سلمان کا کہنا ہے کہ انصاراللہ کو سعودی سرحدی علاقوں میں ایک اور حزب اللہ بننے سے روکنے کے لئے یمن میں جنگ ناگزیر ہے۔ واضح رہے کہ گزشتہ روز انصاراللہ تحریک کے ترجمان نے کہا تھا کہ یمن کے خلاف جنگ اور محاصرے کا خاتمہ یمن سمیت خطے کے مفاد میں ہے۔ واضح رہے کہ یمن میں اقوام متحدہ کے انسانی حقوق کی تنظیموں کا کہنا ہے کہ یمن پر سعودی عرب کے حملوں میں اب تک کم سے دس ہزار سے زائد افراد مارے جا چکے ہیں جبکہ بیس ہزار سے زائد زخمی ہوئے ہیں۔ خیال رہے کہ سعودی عرب نے بعض عرب ممالک کے ساتھ مل کر چھبیس مارچ دو ہزار پندرہ سے یمن کو اپنے وحشیانہ حملوں کا نشانہ بنا رکھا ہے۔ یمن پر سعودی عرب کے حملوں کا مقصد اس ملک میں آل سعود کے اشاروں پر ناچنے والی ایک کٹھ پتلی حکومت قائم کرنا ہے۔

یہ بھی پڑھیں

برطانوی خاتون کے ہاں 22ویں بچے کی پیدائش متوقع

برطانوی خاتون کے ہاں 22ویں بچے کی پیدائش متوقع

لندن :برطانوی خاتون کے ہاں 22 ویں کی پیدائش متوقع ہے جبکہ مذکورہ خاندان کے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے