اسحاق ڈار مستعفی ہوکر وطن واپس نہیں جائینگے، نواز لیگ کے اجلاس میں فیصلہ، نجی ٹی وی کا دعویٰ

اسلام آباد: نجی ٹی وی چینل نے دعویٰ کیا ہے کہ وزیر خزانہ اسحاق ڈار استعفٰی دیں گے اور نہ صرف استعفٰی دیں گے بلکہ مستعفی ہونے کے بعد وطن واپس بھی نہیں جائیں گے۔ یہ اہم ترین فیصلہ مسلم لیگ نواز کے لندن میں ہونے والے اجلاس میں کیا گیا ہے جس کی صدارت سابق وزیراعظم میاں نواز شریف نے کی۔ نجی چینل کا اپنے ذرائع کے حوالے سے کہنا ہے کہ آج لندن میں ہونے والے نواز شریف کی زیرصدارت ہونے والے اجلاس میں یہ فیصلہ کیا گیا ہے کہ اسحاق ڈار کچھ دنوں تک استعفی دے دیں گے، تاہم اسحاق ڈار پاکستان واپس نہیں جائیں گے وہ لندن میں ہی قیام پذیر رہیں گے۔ اجلاس میں یہ بھی فیصلہ کیا گیا ہے کہ اسحاق ڈار اپنا استعفی بھی لندن سے ہی دیں گے، جسے فوری طورپر قبول کیا جائے گا، جبکہ اسحاق ڈار کو نیب کے سمن سوموار کو ہائی کمیشن کے ذریعے پہنچا دئیے جائیں گے۔ اجلاس میں یہ بھی فیصلہ کیا گیا ہے کہ شریف فیملی بھی اگلے چھ مہینے تک پاکستان واپس نہیں آئے گی۔

یہ بھی پڑھیں

شاہد خاقان عباسی ایل این جی کیس میں نیب کے سامنے پیش

شاہد خاقان عباسی ایل این جی کیس میں نیب کے سامنے پیش

راولپنڈی: مسلم لیگ ن کے دور حکومت میں اس وقت کے وزیرپٹرولیم شاہد خاقان عباسی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے