فاٹا اصلاحات پر اے پی سی تقسیم، فضل الرحمٰن اور اچکزئی نے اعلامیہ کی مخالفت کر دی

اسلام آباد: قبائلی علاقہ جات میں اصلاحات پر کل جماعتی کانفرنس تقسیم ہو گئی، اکثریت فاٹا کے خیبر پختونخوا میں انضمام کی حامی ہے جبکہ مولانا فضل الرحمٰن اور محمود خان اچکزئی نے اعلامیہ کی مخالفت کی۔ فاٹا اصلاحات پر عوامی نیشنل پارٹی کے زیراہتمام کل جماعتی کانفرنس کا انعقاد ہوا۔ قبائلی علاقہ جات کے فوری کے پی میں انضمام اور ایف سی آر کے خاتمے کا مطالبہ کیا گیا۔ قبائل کے عوامی اور جمہوری حقوق کی حمایت کی گئی۔ اے پی سی میں عجب بات یہ ہوئی کہ مولانا فضل الرحمٰن اور محمود خان اچکزئی نے اعلامیہ کی مخالفت کر دی۔ اپوزیشن لیڈر خورشید شاہ کا کہنا تھا کہ فاٹا کی تقدیر بدلنے کیلئے سب کا اکٹھا ہونا خوش آئند ہے، اکثریت کی خواہش ہے کہ فاٹا کو خیبر پختونخوا میں ضم ہونا چاہیئے۔

یہ بھی پڑھیں

غیر ضروری اقدام سے اربوں ڈالرکے منصوبوں پر عملدرآمد میں الجھاؤ پیدا ہو گا

غیر ضروری اقدام سے اربوں ڈالرکے منصوبوں پر عملدرآمد میں الجھاؤ پیدا ہو گا

اسلام آباد: پارلیمانی کمیٹی نے سی پیک اتھارٹی کے قیام کی حکومتی تجویزکی مخالف کرتے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے