احتساب عدالت نے نوازشریف کو 19 ستمبر کو طلب کرلیا

اسلام آباد: احتساب عدالت نے سابق وزیراعظم نوازشریف کو 19 ستمبر کو طلب کرلیا ہے۔ پاکستان ویوز کے مطابق احتساب عدالت نے سابق وزیراعظم نوازشریف اوران کے صاحبزادوں حسن اورحسین نوازکو فلیگ شپ انویسٹمنٹ ریفرنس میں 19 ستمبر کو طلب کرتے ہوئے نوٹسز جاری کردیے۔ اس سے قبل عزیزیہ ریفرنس کے حوالے سے بھی دستاویزات عدالت میں پیش کردی گئی ہیں اور اس حوالے سے بھی عدالت کی جانب سے نوٹس جاری ہونے کا امکان ہے۔

سابق وزیراعظم نواز شریف کو بھیجے گئے سمن کی کاپی ایکسپریس نیوز نے حاصل کرلی ہے جس کے مطابق نوازشریف اور بچوں کو سمن لاہور کے 2 گھروں کے پتوں پر بھیجے گئے جن میں لاہور ماڈل ٹاؤن اور رائیونڈ جاتی امرا شامل ہیں۔ سمن کے متن میں کہا گیا ہے الزامات کا جواب دینے کے لیے آپ کی عدالت میں حاضری ضروری ہے، نوازشریف اور دونوں بیٹے 19 ستمبر کی صبح 9 بجے ذاتی حیثیت میں عدالت میں پیش ہوں۔
دوسری جانب ذرائع کا کہنا ہے کہ سابق وزیراعظم نواز شریف ان دنوں اپنی اہلیہ کلثوم نواز کے علاج کے سلسلے میں ملک سے باہر ہیں لہذا نواز شریف کی عدم حاضری پر عدالت میں ان کے وکیل کے پیش ہونے کا امکان ہے۔

یہ بھی پڑھیں

حکومت نے ملکی مفاد میں اپنی مقبولیت داؤ پر لگا دی

حکومت نے ملکی مفاد میں اپنی مقبولیت داؤ پر لگا دی

اسلام آباد: شاہد رشید بٹ کا کہنا تھا کہ اگر ماضی کی حکومتیں سستی شہرت …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے