پی ٹی آئی کسی عمران نیازی کی ذاتی جاگیر نہیں، عائشہ گلالئی

اسلام آباد: پاکستان تحریک انصاف کی قیادت سے ناراض رکن قومی اسمبلی عائشہ گلالئی کا کہنا ہے کہ صرف ایک شخص پارٹی نہیں بناتا اور تحریک انصاف کسی عمران نیازی کی جاگیر نہیں۔ الیکشن کمیشن کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے عائشہ گلالئی کا کہنا تھا کہ معزز جج صاحبان کے سامنے اپنا موقف پیش کیا ہے۔ تحریک انصاف کے وکلا نے غلط بیانی کی، تحریک انصاف کے وکیل عادت کے مطابق جھوٹ بول رہے ہیں۔ شوکاز نوٹس کا جواب وقت پر دیا تھا، تحریک انصاف نا تو چھوڑی ہے اور نا ہی میں چھوڑوں گی۔ یہ میری اپنی جماعت ہے، صرف ایک شخص پارٹی نہیں بناتا اور تحریک انصاف کسی عمران نیازی کی جاگیر نہیں، اسپتال کے نام پر پیسہ اور بیرون ملک کی فنڈنگ کھانے والوں کی سیاست اب نہیں چلے گی۔ عائشہ گلالئی کا کہنا تھا کہ پی ٹی آئی والے کہتے تھے کہ ہم کرپشن کا خاتمہ اور ٹیکس کے پیسے ضائع نہیں کریں گے، اس کا وزیراعلیٰ ایک کروڑ 85 لاکھ کا سوئمنگ پول بنا رہا ہے اور دوسری طرف عمران کو ڈینگی مریضوں کی کوئی پرواہ نہیں وہ سیر و تفریح کرتے رہے۔ اس سے قبل الیکشن کمیشن میں عائشہ گلالئی کے خلاف ریفرنس کی سماعت ہوئی، جس میں عائشہ گلالئی نے وکیل کی خدمات لینے کے لئے کمیشن سے وقت مانگ لیا۔ سماعت کے دوران چیف الیکشن کمشنر نےعائشہ گلالئی سے سوال کیا کہ کیا آپ کو پارٹی کی جانب سے شوکاز نوٹس موصول ہوا۔ جس پر عائشہ گلالئی نے جواب دیا کہ مجھے پارٹی کی جانب سے شوکاز نوٹس موصول ہوا ہے، میں اداروں کا احترام کرتی ہوں۔ چیف الیکشن کمشنرنے کہا کہ ہمیں مقررہ مدت میں ریفرنس کی سماعت مکمل کرنی ہے۔ الیکشن کمیشن نےعائشہ گلالئی کو آئندہ سماعت پر تحریری جواب جمع کرانے کی ہدایت کرتے ہوئے عائشہ گلالئی کے خلاف ریفرنس کی سماعت 19 ستمبر تک ملتوی کر دی۔

یہ بھی پڑھیں

کشمیریوں پر ہونے والے مظالم پر خاموش نہیں رہ سکتے

مظفر آباد: قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان شاہد خان آفریدی نے کہا ہے کہ …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے