لشکر جھنگوی کا انتہائی مطلوب اہم دہشتگرد لاہور سے گرفتار

ورلڈ الیون کے دورہ لاہور سے قبل قانون نافذ کرنے والے اداروں نے کالعدم تنظیم سے تعلق رکھنے والے مبینہ دہشت گرد کو گرفتار کر کے نامعلوم مقام پر منتقل کردیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق مبینہ دہشت گرد کی نشاندہی پر رینجرز اور پولیس نے دیگر شہروں میں وسیع پیمانے پر کالعدم تنظیموں کے سہولت کاروں، معاونت کاروں اور دہشت گردوں کے خلاف کریک ڈاؤن شروع کردیا ہے۔ ذرائع کے مطابق قانون نافذ کرنے والے اداروں نے خفیہ معلومات ملنے پر کالعدم تنظیم کے جنگجو 35 سالہ اسامہ شہزاد، جسکا تعلق چکوال سے ہے، کو لاہور کے ایک انتہائی حساس مقام سے گرفتار کرکے اسکے قبضے سے جہادی لٹریچر، ممنوعہ اشیاء، اہم سرکاری عمارتوں، ہوٹلوں کے نقشے اور اہم شخصیات کی تصاویر وغیرہ بھی برآمد کرلی ہیں۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ کراچی و دیگر شہروں میں ہونے والی دہشت گردی کے واقعات میں بھی اسی مبینہ دہشت گرد کا ہاتھ تھا۔

یہ بھی پڑھیں

مریم نواز اور ان کے کزن یوسف عباس کو احتساب عدالت میں پیش کیا گیا

مریم نواز اور ان کے کزن یوسف عباس کو احتساب عدالت میں پیش کیا گیا

لاہور: نیب پراسیکیوٹر کے مطابق 1992 میں چوہدری شوگر مل قائم کی گئی، 2008-10 میں …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے