دوسری شادی کیوں کی، داعش کے کارکن کی پہلی بیوی نے سہاگ رات پر حملہ کرکے شوہر اور نئی بیوی کو جلا ڈالا

بغداد: شدت پسند تنظیم داعش کے مظالم کے قصے آپ نے بہت سنے ہوں گے، لیکن پہلی بیوی کی مرضی کے خلاف دوسری شادی کرنے والے داعش کے ایک جنگجو کے ساتھ اس کی پہلی بیوی نے جو کچھ کر ڈالا ہے اسے سن کر آپ داعش کے مظالم کو بھی بھول جائیں گے۔ ویب سائٹ ورلڈ وائرڈ ویئرڈ نیوز کی رپورٹ کے مطابق یہ واقعہ عراق کے شہر تل افار میں پیش آیا جہاں داعش کے جنگجو کی پہلی بیوی نے اپنے شوہر اور اس کی نئی نویلی دلہن کو ان کے سہاگ رات کے موقع پرجلا کر مار ڈالا۔

مقامی پولیس کو معلوم ہوا ہے کہ داعش کے جنگجو نے دوسری شادی کا فیصلہ کیا تو اس کی پہلی اہلیہ نے شدید احتجاج کیا، لیکن جنگجو نے پہلی بیوی کے احتجاج کو نظر انداز کرتے ہوئے ایک نو عمر لڑکی سے شادی کرلی۔ وہ شادی کی تقریب کے بعد اپنی نئی اہلیہ کو لے کر بیڈ روم میں چلا گیا تو اس کی پہلی بیوی نے گھر میں پٹرول چھڑک کر آگ لگادی۔ پورا گھر جل کر خاکستر ہوگیا اور اس آگ میں جنگجو اور اس کی نئی نویلی دلہن بھی جل کر راکھ ہوگئے۔ شوہر اور اس کی دلہن کو جلا کر راکھ کرنے والی خاتون فرار ہوگئی ہے اور پولیس تاحال اسے تلاش کررہی ہے۔

یہ بھی پڑھیں

افغانستان: اشرف غنی کی مدت صدارت میں توسیع

افغانستان: اشرف غنی کی مدت صدارت میں توسیع

افغانستان کی عدالت عالیہ نے آئندہ صدارتی انتخابات کے انعقاد تک محمد اشرف غنی کی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے