ایران: میزائیل پروگرام کی توسیع کے لئے ایک ہزار ارب تومان منظور

تہران: اسلامی جمہوریہ ایران کی پارلیمنٹ نے بھاری اکثریت کے ساتھ امریکہ کی طرف سے ایران کے میزائل پروگرام کے خلاف پابندیوں کا منہ توڑ جواب دیتے ہوئے میزائل پروگرام کی توسیع کے لئے ایک ہزار ارب تومان کی منظوری دیدی ہے۔ رپورٹ کے مطابق ایران کی پارلیمنٹ نے بھاری اکثریت کے ساتھ امریکہ کی طرف سے ایران کے میزائل پروگرام کے خلاف پابندیوں کا منہ تو ڑ جواب دیتے ہوئے میزائل پروگرام کی توسیع کے لئے ایک ہزار ارب تومان کی منظوری دیدی ہے۔ ایرانی پارلیمنٹ نے مسلح افواج کو ایران کی دفاعی پوزیشن مضبوط بنانے کے سلسلے میں  دستور دیتے ہوئے ایک مہینے کے اندر جامع رپورٹ طلب کرلی ہے۔

 اطلاعات کے مطابق ایران نے اپنے میزائل پروگرام کے فنڈز میں اضافہ کردیا۔ ایرانی پارلیمنٹ نے پروگرام کے لئے ایک ہزار ارب تومان کی منظوری دے دی ہے جب کہ ایرانی پارلیمنٹ کے اسپیکر کا کہنا ہے کہ امریکہ کو علم ہونا چاہئے کہ اس کی جانب سے عائد کی جانے والی پابندیوں پرایران کا یہ پہلا ردعمل ہے۔ واضح رہے کہ گزشتہ ماہ امریکہ نےایران پر میزائل پروگرام کی وجہ سے پابندیاں عائد کی تھیں جس کے جواب میں ایران نے میزائل پروگرام میں مزید توسیع کا اعلان کردیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں

برطانوی تیل بردار جہاز کو عالمی قوانین کی خلاف کرنے کے الزام میں قبضے میں لے لیا

برطانوی تیل بردار جہاز کو عالمی قوانین کی خلاف کرنے کے الزام میں قبضے میں لے لیا

تہران: ایرانی رضاکار فورس بیسج (سپاہ پاسداران انقلاب اسلامی) کے شعبہ تعلقات عامہ کی جانب …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے