اپنے ایٹمی میزائل سے اس جگہ کو نشانہ بنائیں گے، شمالی کوریا نے زوردار اعلان کردیا کہ پاکستانیوں کی پریشانی بڑھ گئی

پیانگ یانگ: شمالی کوریا کی جانب سے امریکہ کو ایٹمی حملے کی دھمکیاں تو ایک عرصے سے دی جارہی تھیں لیکن پہلی بار شمالی کوریائی صدر نے وہ ہدف بھی بتادیا ہے جسے سب سے پہلے ایٹمی حملے کا نشانہ بنایا جائے گا، اور آپ یہ جان کر حیران ہوں گے کہ یہ ہدف امریکہ میں نہیں ہے۔ ڈیلی سٹار کی رپورٹ کے مطابق شمالی کوریا کے سرکاری اخبار روڈونگ سنمن کا کہنا ہے کہ ایٹمی جنگ کے آغاز کی صورت میں شمالی کوریا سب سے پہلے جنوبی کوریا میں واقع امریکی اڈے کو نشانہ بنائے گا۔ امریکہ نے یہ فوجی اڈہ حال ہی میں جنوبی کوریا کے علاقے فیونگ تھاک میں قائم کیا ہے۔ شمالی کوریا کے سرکاری اخبار کا کہنا ہے ”غاصب امریکی سامراج کا جنوبی کوریا میں واقع اڈہ شمالی کوریا کی پیپلز آرمی کے ایٹمی حملے کا پہلا نشانہ بنے گا۔“

 

دریںا ثناءیہ خبر بھی سامنے آئی ہے کہ شمالی کوریا ایک اور بین البراعظمی ایٹمی میزائل کے تجربے کی تیاری کررہا ہے۔ چند دن قبل ہی شمالی کوریا کی جانب سے ایک بین البراعظمی ایٹمی میزائل کا تجربہ کیا گیا تھا جس کے بعد امریکہ نے اسے سنگین نتائج کی دھمکی دی تھی۔ اب ایک اور میزائل تجربے کے پیش نظر غالباً شمالی کوریا کو خدشہ ہے کہ امریکہ کی جانب سے شدید ردعمل سامنے آئے گا، جس کی پیش بندی کرتے ہوئے پہلے ہی جنوبی کوریا میں واقع امریکی اڈے کو نشانہ بنانے کی دھمکی جاری کردی گئی ہے۔

یہ بھی پڑھیں

واضح اکثریت کے, ساتھ, آئینی تبدیلی کو, منظور کیا

واضح اکثریت کے ساتھ آئینی تبدیلی کو منظور کیا

مصر: آئینی ترمیم کے لیے گزشتہ تین روز سے جاری ریفرنڈم کے نتائج کا اعلان …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے