سربراہ پاک فوج سے افغانستان میں امریکی فورسز کے کمانڈر کی ملاقات

راولپنڈی: افغانستان میں امریکی فورسز کے کمانڈر جنرل جان ڈبلیو نکولسن نے جی ایچ کیو میں پاک فوج کے سربراہ جنرل قمر جاوید باجوہ سے ملاقات کی جس میں خطے کی سیکیورٹی اور سرحدی معاملات پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ آئی ایس پی آر کی جانب سے جاری بیان کے مطابق افغانستان میں موجود امریکی فورسز اور ریسولوٹ سپورٹ مشن (آر ایس ایم) کے کمانڈر جنرل جان نکولسن نے راولپنڈی میں جنرل ہیڈ کوارٹرز (جی ایچ کیو) میں آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سے ملاقات کی۔ آئی ایس پی آر کے مطابق ملاقات کے دوران خطے کی سیکیورٹی صورتحال اور بارڈر مینجمنٹ پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

آرمی چیف اور جنرل نکولسن نے خطے کے امن اور استحکام کے لیے مل کر کام کرنے اور مستقل تعاون جاری رکھنے پر اتفاق کیا۔ ملاقات کے دوران پاکستان میں تعینات امریکی سفیر ڈیوڈ ہیلے بھی موجود تھے۔ پاک فوج کے بیان کے مطابق آرمی چیف جنرل باجوہ نے اس موقع پر افغانستان اور امریکا کے بعض حلقوں کی جانب سے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں پاکستان کی کردار کو داغ دار کرنے کے لیے الزام تراشیوں کا معاملہ بھی اٹھایا اور اس پر تشویش کا اظہار کیا۔

آرمی چیف نے کہا کہ ایک ایسے وقت میں جب کہ امریکا اپنی پالیسی پر نظر ثانی کررہا ہے، پاکستان پر الزام تراشیاں شروع ہوجانا کوئی اتفاق نہیں۔ انہوں نے کہا کہ تمام تر اشتعال انگیزیوں کے باوجود پاکستان دہشت گردی کو شکست دینے کے لیے مثبت کردار ادا کرتا رہے گا کیوں کہ دہشت گردی کا خاتمہ پاکستان کے قومی مفاد میں ہے۔اس موقع پر جنرل نکولسن نے پاک فوج کی پیشہ وارانہ صلاحیتوں کو سراہا اور پاکستانی عوام کے عزم کو خراج تحسین پیش کیا۔

یہ بھی پڑھیں

دھرنے,کے موقع, پر بھیرہ انٹرچیج پرتوڑ پھوڑ, اورجلاؤگھیراؤ

دھرنےکے موقع پر بھیرہ انٹرچیج پرتوڑ پھوڑ اورجلاؤگھیراؤ

سرگودھا: انسداد دہشتگردی کی خصوصی عدالت نے پاکستان عوامی تحریک کےسربراہ ڈاکٹرطاہرالقادری کواشتہاری قراردے کرگرفتار …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے