اوچھے ہتھکنڈوں سے بھارت کو کچھ حاصل نہیں ہوگا، یاسین ملک

سرینگر: مقبوضہ کشمیر میں جموں و کشمیر لبریشن فرنٹ کے غیرقانونی طور پر نظربند چیئرمین محمد یاسین ملک نے کہا ہے بھارت نے مقبوضہ علاقے کو ایک قتل گاہ میں تبدیل کر دیا ہے جہاں قابض بھارتی فورسز نے صرف 8 جولائی 2016ء سے سینکڑوں بے گناہ کشمیریوں کو شہید، ہزاروں کو زخمی، سینکڑوں کو بصارت سے محروم جبکہ ہزاروں کو تھانوں، جیلوں اور تفتیشی مراکز میں پہنچا دیا ہے۔ میڈیا رپورٹ کے مطابق محمد یاسین ملک نے ایک بیان میں کہا ہے کہ بھارتی ریاستی دہشت گردی کا واحد مقصد کشمیریوں کے جذبہ آزادی کو ختم کرنا ہے لیکن بھارت اور اس کے ریاستی گماشتوں کو یاد رکھنا چاہیے کہ ظلم و جبر کے ان ہتھکنڈوں سے وہ کشمیری عوام کو ہرگز مرعوب نہیں کر سکیں گے۔

انہوں نے کہا ظلم و ستم سے کشمیریوں کے حوصلے پست ہونے کے بجائے ان کا جذبہ تحریک مزید تقویت پا رہا ہے۔ انہوں نے کہا قابض انتظامیہ کشمیریوں سے ان کے تمام حقوق سلب کر کے خود تشدد کو ہوا دے رہی ہے۔ انہوں نے اپنی نظر بندی کو انتظامیہ کی بوکھلاہٹ قرار دیتے ہوئے کہا اوچھے ہتھکنڈوں سے بھارت اور اسکی کٹھ پتلیوں کو کچھ حاصل نہیں ہو گا۔

یہ بھی پڑھیں

تنازعہ کشمیر کی بدولت پورا جنوبی ایشیا ایک ہیجانی کیفیت کا شکار ہے، مسعود خان

صدر آزاد کشمیر سردار مسعود خان نے کہا ہے کہ ڈاکٹر عاصمہ شاکر کی کتاب …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے