امریکی خصوصی ایلچی برائے افغانستان و پاکستان نے عہدہ چھوڑدیا

واشنگٹن: امریکا کے خصوصی ایلچی برائے افغانستان و پاکستان نے اچانک عہدہ چھوڑ دیا جس کے بعد امریکا کی جانب سے قائم کیا جانے والا یہ اہم ترین عہدہ خالی ہوگیا ہے۔ امریکی محکمہ خارجہ کے ایک سینیئر عہدے دار نے غیر ملکی خبر رساں ایجنسی اے ایف پی کو بتایا کہ خوصی ایلچی برائے افغانستان و پاکستان لوریل ملر نے عہدے چھوڑ دیا ہے جب کہ ان کے متبادل کا بھی اعلان نہیں کیا گیا۔ محکمہ خارجہ کے ترجمان ہیتھر نوریٹ نے بتایا کہ ملر رینڈ  محکمے میں اپنی پرانی پوزیشن پر واپس جارہے ہیں جب کہ امریکی وزیر خارجہ ریکس ٹلرسن نے اب تک یہ فیصلہ نہیں کیا ہے کہ اب اس عہدے کا کیا کیا جائے گا۔
خیال رہے کہ خصوصی ایلچی برائے افغانستان و پاکستان کا عہدہ امریکا کی جانب سے پاکستان اور افغانستان میں جاری تنازعات سے مشترکہ طور پر نمٹنے کے لیے قائم کیا گیا تھا۔ تاہم جب سے ڈونلڈ ٹرمپ امریکا کے صدر بنے ہیں وہ سفارتی اخراجات میں کمی چاہتے ہیں جب کہ وزیرخارجہ ریکس ٹلرسن متعدد خصوصی ایلچیوں کی ذمہ داریاں ختم کرنے کی منصوبہ بندی کررہے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں

ماسکو امریکا کی جانب سے وینزویلا, اور کیوبا پر, عائد پابندیوں کو, غیر قانونی, شمار کرتا ہے

ماسکو امریکا کی جانب سے وینزویلا اور کیوبا پر عائد پابندیوں کو غیر قانونی شمار کرتا ہے

ماسکو: امریکی قومی سلامتی کے مشیر جان بولٹن نے جمعرات کے روز میامی میں اپنے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے